سرکاری سکولوں کی حالت بہتر بنانے اور ان میں زیر تعلیم طلبہ و طالبات کے لیے ان میں سمر کیمپس کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے

صوبائی وزیر تعلیم و توانائی محمد عاطف خان نے کہا ہے کہ سرکاری سکولوں کی حالت بہتر بنانے اور ان میں زیر تعلیم طلبہ و طالبات کو نصاب کے ساتھ ساتھ ہم نصابی سرگرمیوں کے مواقع فراہم کرنے کے لیے ان میں سمر کیمپس کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے جس کے دوران ملک کے چوٹی کی رضاکار تنظیموں کے تعاون سے بچوں کی کردار سازی اور خاص طور میتھس اور دیگرسائنس کے مضامین کے حوالے سے ان کے اعتماد کی بحالی پر کام کیا جارہا ہے ۔وہ گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول نمبر4 مردان اور گورنمنٹ گرلز سیٹینیل ماڈل ہائی سکول کینال روڈ مردان میں جاری سمر کیمپ کے دورے کے موقع پر منعقدہ تقاریب سے خطاب کررہے تھے ۔تقاریب سے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر مردانہ اعجاز علی خان ،ای ڈی او زنانہ محترمہ ثمینہ غنی، پرنسپل اشرف علی ،کنسلٹینٹ ملیحہ ہاشمی اور کیمپ کے انعقاد میں تعاون کرنے والے نمائش کراچی ، روبوٹیک کراچی ، الف اعلان اور نیومیرکا کے نمائندوں نے بھی خطاب کیا ۔وزیر تعلیم نے گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول نمبر4 مردان میں جاری سائنس نمائش دیکھی اور طلبہ سے ان کے بنائے گئے مختلف ماڈلز کے حوالے تبادلہ خیال کیا آئی ٹی لیب کا افتتاح بھی کیا اور وہاں سمر کیمپ کے دوران طلبہ کو بنیادی کمپیوٹر سکلز سکھانے والے فاسٹ یونیورسٹی کے والنٹیرسکالرز اور طلبہ سے بات چیت بھی کی ۔جبکہ گورنمنٹ گرلز سیٹینیل ماڈل سکول ہائی سکول کینال روڈ مردان میں بھی محمد عاطف خان نے طالبات کی جانب سے لگائے گئے سٹالز کا دورہ کیا اور طالبات سے مختلف امور پر بات چیت کی ۔اس موقع پر طلبہ نے ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے حوالے سے ریسکیو 1122 کے عملے کی جانب سے دی گئی تربیت کا عملی مظاہرہ کیا ۔اپنے خطاب میں محمد عاطف خان نے کہا کہ صوبے میں تعلیمی شعبے کی ترقی کو میگا پراجیکٹ کے طور پر لیا گیا ہے کیونکہ تعلیم کانظام درست ہوگا تو ملک ترقی کرے گا ۔اُنہوں نے کہا کہ اب تک صوبے میں سرکاری سکولوں میں بنیادی سہولیات پر 29 ارب روپے کی خطیر رقم خرچ کیا جاچکی ہے جبکہ چار ارب روپے کی لاگت سے فرنیچر کی فراہمی مکمل کی جاچکی ہے اور رواں سال مزید تین ارب روپے فرنیچر کی فراہمی کے مختص کیے جاچکے ہیں ۔اُنہوں نے کہا کہ صوبے میں دوہزار سکولوں میں سمر کیمپس کامیابی سے جاری ہیں جہاں لاکھوں طالب علموں کو سائنس ، مییھس اور کمپیوٹر کی تعلیم دی جاری ہے اور ان کو فن تقریر ،تحریر اور مختلف ہنر سکھانے کے ساتھ ساتھ ماحول کے حوالے ان میں شعور اجاگر کرنے کا عمل جاری ہے جس سے یقینی طور پر ان کی شخصیت پر مثبت اثرات پڑیں گے ۔اسی طرح جب ہماری حکومت آئی تو صوبے کے سکولوں میں کل 180 آئی ٹی لیب تھے جبکہ ہماری حکومت نے اب تک 1340آئی ٹی لیب قائم کیے ہیں ۔اُنہوں نے کہا کہ پاکستان کو اللہ نے تمام تر وسائل سے نوازا ہے بس ضرورت مخلص قیادت کی ہے ۔اُنہوں نے کہا کہ یوم آزادی قریب ہے اور اس دن ہمیں یہ عہد کرنا ہوگا کہ ملک کی ترقی و خوشحالی اور اس کو حقیقی معنوں میں آزاد کرانے کے لیے اپنا کردار ادا کرنا ہوگا ۔محمد عاطف خان نے سمر کیمپس کے انعقاد میں تعاون کرنے والے اداروں اور رضاکاروں اورمحکمہ تعلیم کے حکام کا شکریہ ادا کیا ۔

Tags: